انتظار ختم۔

Wednesday,22 October 2008
از :  
زمرات : اردو

اردو اور خطِ نستعلیق کا چولی دامن کا ساتھ ہے، بد قسمتی سے ابھی تک ویب کے لئے کوئی بھی قابلِ عمل نستعلیق خط مروج نہیں ہو سکا۔ بعض اوقات جب کوئی جاننے والا میرا بلاگ دیکھتا ہے، تو اُس کا پہلا سوال یہی ہوتا ہے، کہ جیسی اردو ہم پاکستان میں لکھتے ہیں یہ ویسی کیوں نہیں، یہ تو عربی کی طرح ہے ، اور میرا جواب ہوتا تھا کہ فی الحال مجبوری ہے۔ بی بی سی اردو کا خطِ نسخ چاہے کتنا ہی بھدا کیوں نہ ہو، ایک بات کا میں معترف رہا ہوں کہ کم از کم اردو ویب پر یہ خط ایک سنگِ میل کی حثیت رکھتا ہے۔

علوی نستعلیق سکرین شاٹ

ایسی بات نہیں کہ اردو والوں نے نستعلیق کو اپنانے کی کوشش نہیں ہے، کرلپ والوں کا نفیس نستعلیق آیا، اسی طرح فجر نوری نستعلیق ، اور ماشااللہ اپنی حکومتِ پاکستان کی طرف سے پاک نستعلیق بھی منظر عام پر آیا، لیکن خامیوں کے سبب مقبولیت کا درجہ حاصل نہیں کر پائے، اپنے ظہور احمد سولنگی بھائی نے تو پاک نستعلیق کے نظارے کروا کروا کر شوق کو خوب مہمیز کرنے کے بعد چپ سادھ لی، بعد میں معلوم ہوا کہ خطِ نستعلیق بھی سرخ فیتے کا شکار ہو کر کسی وزیرِ با تدبیر کا انتظار کرتا رہ گیا کہ جناب آئیں اور قینچی چلائیں ۔ بعد اس کے جو کچھ پاکستان میں سیاسی سطح پر ہوا وہ اب تاریخ کا حصہ ہے، مجھے تو لگتا ہے یہ سب کچھ پاک نستعلیق کو رکوانے کے لئے پرویز مشرف کو ہٹایا گیا ہے ۔خیر ظہور احمد سولنگی کی جانب سے دکھائے گئے نظارے دیکھنے کے بعد میں نے نئے سرے سے ایک عدد تھیم تیار کیا کہ نستعلیق کے ساتھ استعمال کروں گا، عید کا وعدہ کیا گیا تھا، اور نہ جانے کتنی عیدیں گزر گئی ہیں ۔
پھر امجد علوی صاحب کافی عرصہ سے اردو محفل پر ایک قابل عمل خطِ نستعلیق کا ذکر کرتے رہتے تھے، اور میں چوری چوری دیکھ لیتا تھا کہ خط تیاری کے کن مراحل تک پہنچ گیا ہے، آج محفل پر گیا تو القلم والے شاکر القادری صاحب کی طرف سے کسی خوشخبری کا اعلان کیا گیا ہے، لیکن خوشخبری کس خبر کی ہے، اس کا اندازہ لگانا ہے۔ ہمارے خبرو کی طرف سے معلوم ہوا ہے کہ جلد ہی یعنی کل بروزِ جمعہ علوی نستعلیق میدان میں آ جائے گا اور اردو کمیونٹی کا دیرینہ خواب تکمیل کو پہنچ جائے گا۔
علوی نستعلیق کے آنے کے بعد اس بلاگ کا مجوزہ خط بھی علوی نستعلیق میں بدل دیا جائے گا، اور ایسا کرنے کی درخواست تمام یونی کوڈ اردو کو اپنانے والوں سے بھی کروں گا، تا کہ جلد ہی خط نستعلیق ویب پر اپنا مقام حاصل کر لے ۔

تبصرہ جات

“انتظار ختم۔” پر 7 تبصرے کئے گئے ہیں
  1. بہت اچھی خبر ہے اللہ کرے اس دفعہ یہ کارنامہ انجام پا جائے.

  2. دوست says:

    میں بھی اس کے آنے کا ہی منتظر ہوں پھر اپنا بلاگ اور اردو کوڈر فورم اسی فونٹ‌ پر کردوں گا.

  3. ڈفر says:

    دیکھتے ہیں کیا خوشخبری ہے۔ اگر واقعی نستعلیق ہوا تو میں تو ضرور استعمال کروں گا۔ لیکن اگر کوالٹی ٹیسٹ بھی پاس کر گیا تو صرف جبھی۔ 🙂

  4. مجھے بھی بے چینی سے انتظار ہے. دعا ہے کہ واقعی یہ ویب پر قابل استعمال ہو.

  5. عماد says:

    یقینا اچھی خبر ہے ہم اردو والوں کو کوشش کرنی چاہیۓ کہ کسی طرح نستعلیق لینکس اور مائکروسافٹ میں بائ ڈفالٹ استعمال چل سکے آج کمپیوٹر پر اردو اپنا رسم الخط بچانے کی جدوجہد کرھی ھے
    نوکیا فون میں بھی یہی صورت حال ھے نوکیا والے بھی کوئ ٹاھوما ٹائپ کا فانٹ استعمال کر رھے اسکی ایک وجہ تو اردو نستعلیق میں کوئ اچھا فانٹ دستیاب نہ ہونا ھےکہ جسکو استعمال کیا جاسکے دوسری سب سے بڑی وجہ اردو استعمال کرنے والوں کی کم
    تعداد اور رسم الخط کی طرف سے بے پرواھی ہے ہم میں سے چند لوگوں کو نکال دیں تو بہت سے ایسے ہیں جو اردو کے لیۓ کچھ کہتے تک نہیں کرنا تو دور کی بات رہی
    کیا وجہ ہے کہ اور ساری زبانیں اپنے رسم الخط میں کمپیوٹر اور موبائل پر موجود ہیں اور ہماری اردو کو عربی کے ساتھ ڈھکیل دیا گیا اور ہم نے قبول بھی کرلیا
    مرتے کیا نہ کرتے بغیر کچھ کیۓ اتنا ہی مل گیا تھوڑا ہے
    اگر ہم میں سے ہر شخص کوشش کرے تو یقینا وہ دن دور نہیں جب اردو اپنےاصلی روپ میں پی سی اور موبائل کو بھی زینت بخش رہی ہوگی

  6. عماد says:

    اچھی خبر ھی

  7. شکر ہے آپ کی دلی تمنا پوری ہوئی. اگر پھر بھی افاقہ نہ ہو تو جنوری 2009 میں آپ نیا دھماکہ سنیں گے. اگر یہ دھماکہ ہوگیا تو نیا دھماکہ نہیں ہوگا.

تبصرہ کیجئے

اس بلاگ پر آپ کے تبصرہ کی حوصلہ افزائی کی جاتی ہے
اگر آپ اپنے تبصرہ کے ساتھ تصویر لگانا چاہتے ہیں، تو یہاں جا کر تصویر لگائیں ۔