تمہيں جاناں اجازت ہے

Sunday,22 May 2005
از :  
زمرات : میری پسند, اردو

تمہيں جاناں اجازت ہے
کوئی بھی فيصلہ کر لو
ہمارے منتظر ٹھرو
يا ہم کو الوداع کہہ دو
ہمارے نام سےمنسوب کر دو نام کو اپنے
يا اپنا نام دے کر تم کسی کے ميت بن جاؤ
تمہيں جاناں اجازت ہے
کوئی بھی راستہ چُن لو
ہمارے پاؤں ميں تو وقت کی زنجير لپٹی ہے
بہت نڈھال ہيں ہم تو دکھوں کی آزمائیش ہے
بہت ممکن ہے تھک جاؤ ہمارے ساتھ چل کر تم
محبت کی تھکاوٹ تم کو ہم سے بد گماں کر دے
تو اس سے قبل واپسی کی ہر راہ کھو جائے
جو سوچا بھی نہيں ہم نے وہ کل ہو جائے
تمہيں جاناں اجازت ہے
کوئی بھی فيصلہ کر لو
ہمارا تم سے وعدہ ہے تمہاری ياد کو ہم تو
سدا دل کے دريچے ميں يونہی آباد رکھيں گے
کہ دل روتا رہے ہر پل لبوں کو شاد رکھيں گے
تمہيں ہم ياد رکھيں گے
تمہيں جاناں اجازت ہے
تم اپنے حوصلوں ميں جب تھکاوٹ سی کبھی پاؤ
الجھ جاو مسائل ميں وفا کو نا نبھا پاؤ
کسی پيارے سے مکھڑے کی حسيں آنکھوں ميں کھو جاو
اجازت ہے تمہيں جاناں
اگر اُس پل جو تم چاہو
کوئی بھی فيصلہ کر لو
ہمارے منتظر ٹھرو
يا ہم کو الوداع کہہ دو

تبصرہ جات

“تمہيں جاناں اجازت ہے” پر 17 تبصرے کئے گئے ہیں
  1. Asma says:

    Assalamo alaykum w.w!

    Wow ! that is a nice piece!!

    🙂

  2. SHAPER says:

    nice wording ..dude but sound like girlish

  3. Harris - حارث says:

    hum to muntazir hi thairain gay.

  4. اجمل says:

    کسی حقیقت پسند کی تحریر ہے یا پھر مایوسی کا اظہار ۔۔۔ مصطفے زیدی کا ایک شعر یاد آیا:

    انہی پتھریلی راہوں پہ چل کے آ سکو تو آؤ
    میرے گھر کے راستہ میں کوئی کہکشاں نہیں ہے

  5. سا ئر ہ عنبر ین says:

    bohat khoob 🙂

  6. Anonymous says:

    اجازت ہے تمہيں جاناں
    یار اتنی بھی ڈھیل نہ دو، کہیں بوکاٹا کا شور نہ مچ جائے۔

  7. منیراحمدطاہر says:

    اجازت ہے تمہيں جاناں
    یار اتنی بھی ڈھیل نہ دو، کہیں بوکاٹا کا شور نہ مچ جائے۔

  8. Qadeer AHmad Rana says:

    تمہیں جاناں اجازت ہے
    چاہے بلاگ کرو
    چاہے چھٹی کرلو

    اجازت ہے تمہیں جاناں

    چاہے کبھی آؤ
    چاہے اداس کر دو
    اجازت ہے تمہیں جاناں

    بنفسِ نفیس آؤ
    چاہے قلم دکھا دو
    اجازت ہے

    (اس کے بعد شاعر کا قلم ٹوٹ گیا بے چارہ)

  9. Qadeer AHmad Rana says:

    تمہیں جاناں اجازت ہے
    چاہے بلاگ کرو
    چاہے چھٹی کرلو

    اجازت ہے تمہیں جاناں

    چاہے کبھی آؤ
    چاہے اداس کر دو
    اجازت ہے تمہیں جاناں

    بنفسِ نفیس آؤ
    چاہے قلم دکھا دو
    اجازت ہے

    (اس کے بعد شاعر کا قلم ٹوٹ گیا بے چارہ)

  10. Nabeel says:

    اجمل صاحب، شعر کچھ یوں ہے؛
    انہی پتھروں پر چل کر اگر آ سکو تو آؤ
    میرے گھر کے راستے میں کوئی کہکشاں نہیں ہے

  11. exube says:

    hi,
    u dropped a comment at my blog few months ago, yes few months ago and ma checking it today. from that it seemed you know me … umm.. do I know u?
    btw.. cool blog in urdu, its good to see increasing number of urdu blogs.

  12. Anonymous says:

    umm..Mr jahanzaib…abb shaiyree b shoro kar dee…buhat acha ..likhtay ho…

    kisi piyaaray sai mukhray ki haaseen ankhoo mai koh jaoo..wah wah..hehehe

    miss mughal

  13. Anonymous says:

    wasee shah ko baas pata na chalay..k tum b shaiyer ho

    mis mughal

  14. Zeeast says:

    nice words…..:)

  15. exube says:

    yup, you have got the name right,(but I spell it differently) but I was never part of pak fellow forum and how come you guessed my name, when I dont use it on my page. I dont remember knowing any one with ur name. I guess you have got the wrong person.
    anyways..
    happy blogging.

  16. شعیب صفدر says:

    achi nazan hai,

  17. Anonymous says:

    تم اپنے حوصلوں ميں جب تھکاوٹ سی کبھی پاؤ
    الجھ جاو مسائل ميں وفا کو نا نبھا پاؤ
    کسی پيارے سے مکھڑے کی حسيں آنکھوں ميں کھو جاو
    اجازت ہے تمہيں جاناں
    اگر اُس پل جو تم چاہو
    کوئی بھی فيصلہ کر لو
    ہمارے منتظر ٹھرو
    يا ہم کو الوداع کہہ دو

    :(… very nice ji

تبصرہ کیجئے

اس بلاگ پر آپ کے تبصرہ کی حوصلہ افزائی کی جاتی ہے
اگر آپ اپنے تبصرہ کے ساتھ تصویر لگانا چاہتے ہیں، تو یہاں جا کر تصویر لگائیں ۔